May 13, 2009

ایک تازہ غزل

جُملہ کچھ 'بالغانہ' سا ہے لیکن لکھنے میں عار کچھ یوں نہیں کہ فرمودۂ قبلہ و کعبہ جنابِ حضرتِ علامہ اقبال علیہ الرحمہ ہے اور بلاگ کے قارئین میں کوئی "نابالغ" بھی نہیں۔ اپنی وفات سے کچھ ماہ قبل جب کہ آپ شدید بیمار تھے اور اپنی طویل بیماری سے انتہائی بیزار، سید نذیر نیازی، جن کے ذمّے علامہ کے اشعار کی ترتیب و تسوید تھی، کو فرماتے ہیں "آمدِ شعر کی مثال ایسی ہے جیسے تحریکِ جنسی کی، ہم اسے چاہیں بھی تو روک نہیں سکتے۔" آخر الذکر" تحریک کے متعلق ہمیں علامہ سے کتنا ہی اختلاف کیوں نہ ہو، اول الذکر سے مکمل اتفاق ہے۔
شاعر بیچاروں کی مجبوری یہ ہوتی ہے کہ اگر ان پر کچھ اشعار کا نزول ہو جائے تو اپنی اس خود کلامی کو "خود ساختہ" کلام کا نام دے کر سرِ بازار ضرور رکھ دیتے ہیں، سو اپنی ایک نئی غزل لکھ رہا ہوں۔ پانچ ہی شعر لکھ پایا، مزید لکھنے کا ارادہ تھا لیکن پھر اس غزل کیلیے تحریک ہی پیدا نہیں ہوئی، عرض کیا ہے۔

آرزوئے بہار لاحاصِل
عشقِ ناپائدار لاحاصِل

قیدِ فطرت میں تُو ہے پروانے
تیرا ہونا نثار لاحاصِل

ہے شفاعت اگر بُروں کے لیے
نیکیوں کا شمار لاحاصِل

دلِ دنیا ہے سنگِ مرمر کا
لاکھ کر لو پکار، لاحاصِل

شعر و گُل میں ڈھلے اسد لمحے
کب رہا انتظار لاحاصِل

متعلقہ تحاریر : میری شاعری

13 comments:

  1. پروانے کی جانثاری کو لاحاصل کہہ کرکیا آپ نے اس کی قربانی کی تحقیر نہیں کر دی.

    ReplyDelete
  2. پہلے تو یہ دعا کریں کہ یہ پوسٹ آپ کی مسجد کے مولوی صاحب نہ پڑھ لیں۔۔۔
    توہین اقبال کا کیس پیش ہوجائے گا کل جمعے کے خطبے میں
    :grin:
    ہے شفاعت اگر بُروں کے لیے
    نیکیوں کا شمار لاحاصِل
    یہ شعر حاصل غزل ہے میری رائے میں۔۔۔۔

    ReplyDelete
  3. افضل صاحب، جو جانثاری غیر اختیاری ہے وہ لاحاصل ہی ہے، شاید یہی کہنا چاہا تھا میں نے۔
    شکریہ جعفر، نوازش اور بھیا محلے کے مولوی نہیں ویب کے مولویوں سے ڈرنے والی بات ہے۔

    ReplyDelete
  4. ب غزل کہی ہے آپ نے وارث صاحب. ..
    ہے شفاعت اگر بروں کے لیے
    نیکیوں کا شمار لا حاصل

    کمال ہے جناب!

    ReplyDelete
  5. معاف کیجیے گا "خوب" کاپی نہیں ہوا تھا شاید

    ReplyDelete
  6. بہت شکریہ عین لام میم، نوازش آپ کی۔

    ReplyDelete
  7. وارث صاحب ایک بات پوچھنی تھی۔
    آپ اردو ٹیک سے بلاگسپاٹ پہ منتقل ہوئے ہیں نا؟
    کیا آپ نے اپنی تحاریر وہاں سے یہاں امپورٹ کی تھیں۔ ۔ ۔؟
    اگر ہاں تو کیسے۔ ۔ ؟

    ReplyDelete
  8. عمیر صاحب، جی بالکل میں نے اردو ٹیک سے اپنا بلاگ، بلاگ سپاٹ پر منتقل کیا تھا لیکن یہ امپورٹ نہیں کیا تھا بلکہ ایک ایک پوسٹ کو کاپی پیسٹ کرنے کی مشقت کی تھی کئی دنوں تک، لیکن پھر تبصرے نہیں آ سکے تھے۔

    ReplyDelete
  9. اس کا مطلب ہے مجھے بھی یہی مشق کرنی پڑے گی۔ ۔۔ ۔ !
    !

    ReplyDelete
  10. بہت خوبصورت جناب

    دیر سے تبصرے پر معذرت
    آج ہی آپ کی باقی تحاریر بھی پڑھتا ہوں
    جو کہ اس تحریر کے بعد
    کل ملا کے پانچ تحاریر رہ گئی ہیں

    ReplyDelete
  11. اجی ڈفر بھائی صاحب، ہماری تحاریر کو پڑھنا کیوں فرض کر لیا آپ نے اپنے اوپر :)

    ReplyDelete